50+ best dard bhari shayari urdu

 dard bhari shayari urdu


dard bhari shayari urdu
 dard bhari shayari urdu






جو نظر سے گزر جایا کرتے ہے
وہ ستارے اکثر ٹوٹ جایا کرتے ہے
کچھ لوگ درد کو بیاں نہی کرنے دیتے
بس چپ چاپ بکھر جایا کرتے ہے


تیری آرزو میرے خواب ہے
جیسکا راستہ بہت خراب ہے
میرے زخم کا اندازہ نہ لگا
دل کا ہر پنّا درد کی کتاب ہے


ہم اُمیدوں کی دنیا بساتے رہے
وہ بھی پل پل آزماتے رہے
جب محبّت میں مرنے کا وقت آیا
ہم مر گئے اور وہ مسکراتے رہے


رونے کی سزا نہ رُلانے کے سزا 
یہ درد محبّت کو نبھانے کے سزا 
ہستی ہے تو آکھ سے نکل آتے ہیں آسو
یہ اس شکش سے دل لگانے کی سزا


حادثے انسان کے سنگ مسکرائی کرنے لگے 
لفظ کاغذ پر اتر جادو گری کرنے لگے
کامیابی جسنے پائی اُنکی گھر بس گئے
جنکے دل ٹوٹ وہ عشق شاعری کرنے لگے

dard bhari urdu shayari in 4 line



دل جو میرا اگر رویہ نہ ہوتا 
ہمنے بھی آخو کو بھگویا نہ ہوتا
دو پل کی حشی میں چھپا لیتا گمو کو
خواب کی حقیقت کو جو سنجویا نہ ہوتا




لکھو کچھ آج یہ وقت کا تقاضا ہے
میرے دل کا درد ابھی تازہ تازہ ہے
گر پڑتے ہیں میرے آنسو میری ہیں کاغذ پر
لگتا ہے کی کلام میں سہی کا درد جدا ہے




وہ ناراض ہیں ہم سے کہ ہم کچھ لکھتے نہیں
کہاں سے لائیں لفظ جب ہم کو ملتے ہیں
درد کی زبان ہوتی تو بتا دیتی شاید
وہ زخم کیسے دکھائیں جو دیکھتے ہیں




رستے ہوئے زخموں کو بھلانے لگے ہیں ہم
ہر درد کے نشان مٹانے لگے ہیں ہم
اب اور کوئی ظلم ستاۓ گا بھلا
ظلمو ستم کو ستانے لگے ہیں اب ہم



روز بلاتا ہوں ایک زہر کا پیالہ اسے
ایک درد جو دل میں ہے مرتا ہی نہیں


نصیحت اچھی دیتی ہے دنیا
مگر درد کسی غیر کا ہو


dard bhari shayari in urdu 2 lines



آنکھوں میں عمر آتا ہے بادل بن کر
درد احساس کو بنجر نہیں رہنے دیتا


آئینہ آج پھر رشوت لیتا پکڑاگیا
دل میں تھا درد چہرہ حستا ہوا پڑا گیا



درد میں بھی یہ لب مسکرا جاتے ہیں
بیتے لمحے ہمیں جب بھی یاد آتے ہیں


100+ best poetry about life in urdu Read more

لہجے سے اٹھ رہا تھا ہر ایک درد کا دوا
چہرہ بتا رہا تھا کہ کچھ گابا دیا



درد کو مسکرا کر سہنا کیا سیکھ لیا
سب نے سوچ لیا ہے مجھے تکلیف نہیں ہوتی



میرے تو درد بھی اوروں کے کام آتے ہیں
میں رو پڑوں تو کئی لوگ مسکراتے ہے

dard bhari shayari urdu mein


لوگ منتظر ہی رہے کہ ہمیں ٹوٹتا ہوا دیکھے
اور ہم تھے کہ درد سہتے سہتے پتھر کے ہو گئے



تکلیف یہ نہیں کہ تمہیں عزیز کوئی اور ہے
درد تب ہوا جہ ہم نظر انداز کیے گئے



میرے آنسوؤں کے دام تم چکا نہی پاؤگے
محبت نہ لے سکے تو درد کیا خریدو گے



آج اس نے ایک درد دیا تو مجھے یاد آیا
ہم نے ہی دعاؤں میں اس کے سارے درد منگے تھے



درد کی بھی اپنی الگ ادا ہے
وہ بھی سہنے والوں پر فدا ہے



بہت درد ہے اے جانے آدھا تیری محبت میں
کیسے کہہ دو تجھے وفا نبھانی نہیں آتی



ہر ملاقات پر وقت کا تقاضہ ہوا
ہر یاد پر دل کا درد تازہ ہوا


میری ہر شاعری میں صرف تم ہوتے ہو
درد بس اتنا ہے شرک ساری میں ہی کیوں ہوتے ہو


dukh bhari shayari in urdu


نہ درد ہوا سینے میں نہ ماتھے میں سخن آئی
اس بار جو دل ٹوٹ تو بس چہرے پہ مسکان آئی



بے نام سا یہ درد ٹھہر کیوں نہیں جاتا
جو بیت گیا ہے وہ گزر کیوں نہیں جاتا


نیند تو درد کے بستر پہ بھی آ سکتی ہے
ان کی آغوش میں سر ہو یہ ضروری تو نہیں


Motivational shayari in urdu Read more


عشرت قطرہ ہے دریا میں فنا ہو جانا
درد کا حد سے گزر جانا ہے دوا ہو جانا



جب درد ے دل ہو تو دوا کیجئے
جب دل ہی درد ہو تو کیا کیجئے 




کمال کا جگر رکھتے ہیں کچھ لوگ
درد لکھتے ہیں اور اہ تک نہیں کرتے



لوگ کہتے ہیں ہم مسکراتے بہت ہے
اور ہم تھک گئے ہے درد چھپاتے چھپاتے




درد کی شام ہو یا سکھ کا سویرا ہو
سب کچھ قبول ہے اگر ساتھ تیرا ہو 



تو ہے سورج تجھے معلوم کہاں رات کا درد
زخم کا نشان ہیں اور درد کی انتہا نہیں


dard bhari shayari urdu me



میری فطرت میں نہیں اپنا درد بیاں کرنا
اگر تیرے وجود کا حصہ ہو تو محسوس کر مجھے




اس طرح میری طرف میرا مسیحا دیکھ
درد دل میں ہی رہے اور دبا ہو جائے

Poems about life in urdu Read more


ہم نے سوچا تھا بتائیں گے دل کا درد تم کو
پر تم نے تو اتنا بھی نہ پوچھا کہ خاموش کیوں ہو




تم نہ کر سکو گے میرے دل کے درد کا علاج
زخم کو ناسور ہوئے مدت گزر گئی



دنیا بڑی ظالم ہے ہر بات چھپانی پڑتی ہے
دل میں درد ہوتا ہے پھر بھی ہونٹوں پر ہنسی لانا پڑی ہے




تیری تصویر کی تعریف کرنے سے بھی ڈرتا ہے
زمانہ جان نہ جائے تو مجھے اچھی لگتی ہے


dard bhari shayari in urdu for love



بنا کے تاج محل ایک دولت مند عاشق نے
غریبوں کی محبت کا تماشہ کر دیا




کل ہم رہیں یا نہ رہیں
یہ دل ہمیشہ تیرا رہے گا




اے خدا تو ہی میرا انصاف کر دے
اگر دوریاں ہی دینی تھی تو ملایا کیوں




محبت ادھوری رہ جاتی ہے
تبھی تو شاعری پوری ہوتی ہے



وہ اچھے ہیں تو گونگے اور کے لیے
ہمارا تو برا حال کر رکھا ہے




اب تو بہت کم ہے درد میرے دل کا
سنا ہے کسی سے پوچھا تھا اس نے حال میرا



اتنا بھی ہم سے ناراض مت ہوا کرو
بدقسمت ضرور ہیں ہم مگر بے وفا نہی



بے کار ہے شاعری درد کے بنا
درد ہی رنگ بھرتا ہے غزل میں




کچھ تو رحم کر اے سنگ دل صنم
اتنا تڑپنا تو لکیروں کے بھی نہ تھا



غلط فہمی میں زندگی گزار دی
کبھی ہم نہیں سمجھے کبھی تم نہیں سمجھے



نصیب کا کھیل بھی ہمنے عجیب طریقے سے کھیلا
جو نصیب میں اسی کو ٹوٹ کر چاہا بیٹھے




Thank you

Post a Comment

0 Comments