chai Poetry in urdu sms

 chai Poetry in urdu sms




پی لیتے ہے ایک دوسرے کی جھوٹی چائے بھی 
دوستی کسی مذہب کی محتاج نہی ہوتی

Pi lete hai ek dusre ki jhuti cahi bhi 
Dosti kisi mazhab ki mohtaj nhi hoti 






اُسکی ہاتھ کی چائے
ہائے بنرا ڈوب کے مرجی

Uske haath ki chai 
Haye banda doob ke marjay






ہر چیز اچھی لگنے کے لئے ایک وقت ہوتا ہے 
مگر چائے تو ہر وقت اچھی لگتی ہے 


Har cheej achi lagne ke liye ek waqt hota hai 
Mager chai to har waqt achi lagti hai 




نغمے وفا کے تیرے بھی گنگناتے اے زندگی
کاش تو چائے سا سُکو دیتی


Nagme wafa ke tere bhi gungunate-e-zindagi
Kash tu chai sa suku deti 










Post a Comment

1 Comments

Please do not spam